بہترین زندگی کے راز, نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ


کیا آپ کی شادی نہیں ہورہی یا آپ اچھی ملازمت چاہتے ہیں تویہ وظیفہ ضرور کریں پھر اس کا کمال دیکھیں

  جمعرات‬‮ 11 اکتوبر‬‮ 2018  |  16:08

اللہ کریم کو اپنے بندے کی شکرگزاری بہت پسند ہے اوروہ ا پنے شکر گزار بندوں کی ہر دعا کو قبول فرماتا ہے ۔انسان اگر شکر گزاری کرنا سیکھ لے تو یہ سب سے افضل عمل ہے ۔ہم لوگ شکر گزاری نہ کرنے کی وجہ سے زمانے کی مشکلات کا شکار ہوتے ہیں۔جیسا کہ شادی کا نہ ہونا اور ملازمت کا نہ ملنا،یہ بھی نا شکری کا نتیجہ ہے۔

جو لوگ چاہتے ہیں کہ انہیں اچھی ملازمت مل جائے اور جن کی شادی نہیں ہوپارہی ان کی شادی ہوجائے تو وہ سورہ نحل کی یہ آیت پڑھ

کر دعا کیا کریں۔وان تعدو انعمۃ اللہ لا تحصوھا ان اللہ لغفور رحیم۔برائے ملازمت یا شادی اوّل گیارہ مرتبہ درود شریف پڑھے۔ پھر یہ آیت تین سو تیرہ بار، پھر درود شریف گیارہ بار روزانہ مسلسل بلاناغہ اکتالیس روز پڑھے۔ انشاء اللہ تعالیٰ کامیاب ہوگا۔

اگر ملازمت کے لئے پڑھا ہے تو ملازمت مل جائے گی اور اگر شادی کے لئے پڑھا ہے تو شادی ہو جائے گی۔ اگر اکتالیس دن سے قبل ہی کام ہو جائے۔ تب بھی اکتالیس دن پورے کرے چھوڑے نہیں ۔بطور مسلمان یہ ہم سب کا عقیدہ ہے کہ ہمیں آخرت میں اپنے دنیا میں کئے گئے تمام اعمال کا حساب دینا ہے۔

مختلف حوالوں کو مدنظر رکھا جائے تو ہمیں پتا چلتا ہے کہ بروز محشر جہاں نہ ماں اپنے بیٹے کو پہچانے گی اور نہ بیٹا اپنی ماں کو۔ ہر شخص ایک ایک نیکی کو ترس رہا ہوگا اور خود پر افسوس کرے گا کہ میں نے دنیا میں رہ کر نیک اعمال کیوں نہ کئے اور میں کیوں کر گناہوں میں پڑا۔:حضور پاک ﷺ کا فرمان عالیشان کا مفہوم ہےقیامت کے دن کوئی ایسی آنکھ نہ ہوگیجو رو نہیں رہی ہوگی۔ پس صرف تین ایسی آنکھیں ہیں جو نہیں رو رہی ہوں گی۔ان تین آنکھوں میں سے پہلی آنکھ وہ ہے جو غیر محرم کی طرف دیکھنے سے بچی۔

دوسری وہ آنکھ جو اللہ عزوجل کی راہمیں اس کے راستے کے اندر جاگتی رہی، پہرہ دیتی رہی یا سرحدوں کے اوپر حفاظت میں مشغول رہی۔اور تیسری وہ آنکھ جو جس کے بارے میں جان کر آپ کے بھی رونگٹے کھڑے ہوجائیں گے۔ فرمایا تیسری وہ آنکھ جس سے خوف خدا میں مکھی کے سر کے برابر بھی آنسو نکلا ہو۔حضور پاک ﷺ کے فرامین کی روشنی میں نظر کی حفاظت بے حد ضروری ہے اور اللہ عزوجل نے خصوصیت کے ساتھ قرآن پاک میں اس کا تذکرہ ارشاد فرمایا ہے۔:مفہوم ملاحظہ فرمائیںاور اپنی شرمگاہ کی حفاظت کریں،

یہ بہتر ہے ان کے لئے۔بے شک اللہ ان کے کاموں کی خبر رکھتا ہے یعنی اگر تم اپنی نظر کو محفوظ نہیں رکھ پاتے تو مت سمجھو کہ کسی نے دیکھا نہیں ہے، تمہارا رب دیکھ رہا ہے۔ اس کی نظر سے کوئی شے پوشیدہ نہیں ہے۔ ایک ایک چیز لکھی جارہی ہے اور اس کا حساب کل تمہیں دینا پڑے گا۔ بے شک وہ جانتا ہے وہ دیکھ رہا ہے اگر تم بچ جاؤ تو وہ پھر بھی دیکھ رہا ہے اور اگر تم نہ بچو تو وہ پھر بھی دیکھ رہا ہے۔

دوسری طرف مسلمان عورتوں کو بھی یہ حکم دیا ہے کہ اے محبوب مسلمان عورتوں کو بھی یہ حکم دیں کہ وہ بھی اپنی نظروں کو نیچا رکھیں۔اگر مرد کو روکا گیا ہے کہ وہ غیر محرم عورت کو نہ دیکھے تو عورت کو بھی روکا گیا ہے۔ اس لئے ہر صاحبِ ایمان مسلمان کو اپنی آنکھوں کی حفاظت کرنی چاہیئے اپنی آنکھوں کو ان آنکھوں میں شمار کرنا چاہیئے جن سے قیامت کے دن آنسو نہ گر رہے ہوں یا نہ رو رہی ہوں۔اللہ سے دعا ہے کہ وہ ہمیں اپنی آنکھوں کی حفاظت کرنے والا سچا پکا مسلمان بننے کی توفیق عطا فرمائے (آمین)۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎