بہترین زندگی کے راز, نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ


وہ آسان ترین طریقہ جس کی مدد سے آپ انڈوں کو ایک سال تک استعمال کرسکیں گے

  پیر‬‮ 3 دسمبر‬‮ 2018  |  22:54

اگر آپ کو انڈے سستے مل رہے ہوں تو آپ کا دل کرتا ہے کہ زیادہ سے زیادہ خرید لیں لیکن خراب ہونے کے ڈر سے آپ ایسا نہیں کرتے لیکن آج ہم آپ کو انڈوں کو لمبے عرصے تک محفوظ کرنے کا ایسا طریقہ بتائیں گے کہ اگلی بار آپ زیادہ انڈے خرید کر انہیں محفوظ بنالیں گے۔ انڈوں کو محفوظ بنانے کا طریقہبرف بنانے والے برتن میں

انڈوں کو توڑ کر ڈالیں۔آپ اسمقصد کے لئے اپنی مرضی کا برتن بھی استعمال کرسکتے ہیںجس میں آپ انڈوں کو الگ الگ توڑ کر ڈال سکتے ہیں۔اب ان

انڈوں کو فریزر میں رکھیں اور جب وہ بالکل جم جائیں تو انہیں برتن سے باہر نکال کر کسی شاپنگ بیگ میں ڈال کر ٹھنڈا رکھیں۔اس طریقے سے آپ انڈوں کو ایک سال تک استعمال کرسکتے ہیں۔ اگر آپ انڈوں کی زردی اور سفیدی کو الگ استعمال کرنا چاہتے ہیں تو انہیں فریز کرتے ہوئے الگ الگ کردیں۔

اگر کسی شخص کو ہائی کولیسٹرول کا عارضہ ہو تو ہارٹ اٹیک یعنی دل کے دورے کا خطرہ بھی بڑھ جاتا ہے۔مگر سوال یہ ہے کہ اگر کسی فرد میں ہائی کولیسٹرول کی تشخیص ہو تو کیا وہ انڈے کھاسکتا ہے جس میں کولیسٹرول کی مقدار کافی زیادہ ہوتی ہے؟اس سوال کے جواب سے پہلے یہ جان لیں کہ ہارٹ اٹیک اس وقت ہوتا ہے جب دل کو خون کی سپلائی اچانک تھم جائے۔عام طور پر دل کے دورے کی وجہ امراض قلب ہوتی ہے جس میں دل کو خون پہنچانے والی شریانیں کولیسٹرول کے باعث بند ہوجاتی ہیں۔

کولیسٹرول ایک چربیلا، نرم اور ملائم مادہ ہے جس کی متعین مقدار انسانی صحت کے لیے فائدہ مند ہوتی ہے مگر اس میں اضافہ خون کی نالیوں یا شریانوں کی دیواروں کے جم کر انہیںتنگ اور سخت کردیتی ہے۔اس کے نتیجے میں خون کی سپلائی روکتی ہے اور ہارٹ اٹیک کا خطرہ بڑھتا ہے۔ہارٹ اٹیک، امراض قلب یا دل کے دیگر مسائل کی روک تھام کے لیے ضروری ہوتا ہے کہ کولیسٹرول کی سطح کو معمول پر رکھا جائے اور اس کے لیے ان غذاؤں کا استعمال کم کرنا چاہئے جن میں سچورٹیڈ فیٹ کی مقدار بہت زیادہ ہوتی ہے۔اب اوپر والے سوال کی جانب آتے ہیں کہ ہائی کولیسٹرول کے شکار افراد اگر انڈے کھائیں تو کیا انہیں ہارٹ اٹیک کا خطرہ تو نہیں ہوتا؟

تو اس کا جواب ہے کہ نہیں ایسا نہیں ہوتا۔ہارٹ یوکے نامی دل کی صحت کو بہتر بنانے کے لیے کام کرنے والے ادارے کے مطابق انڈوں میں غذائی کولیسٹرول زردی میں پایا جاتا ہے مگر لوگوں کو اس سے خوفزدہ ہونے کی ضرورت نہیں۔انڈوں میں پائے جانے والے کولیسٹرول میں سچورٹیڈ فیٹ کی شرح بہت کم ہوتی ہے اور جیسا اوپر درج کیا جاچکا ہے کہ زیادہ سچورٹیڈ فیٹ سے کولیسٹرول میں اضافے کا خطرہ بڑھتا ہے۔انڈوں میں پائے جانے والی غذائی کولیسٹرول بلڈ کولیسٹرول بڑھانے کا باعث نہیں بنتی بلکہ وہ صحت کے لیے نقصان دہ کولیسٹرول کی سطح میں کمی لاتی ہے۔

درحقیقت انڈوں کی زردی مختلف قسم کی چربی کا مجموعہ ہوتی ہے جبکہ وٹامن ای بھی اس کا حصہ ہے جو جسم کے لیے کافی ضروری ہے۔تاہم اس کا سب سے خاص جز کیروٹین ہے جس کے ساتھ لیوٹین اور زیاژنتین بھی ہوتے ہیں جو آنکھوں کی صحت میں مددگار اور ورم سے تحفظ دیتے ہیں۔یقیناً کیروٹین نامی جز پھلوں اور سبزیوں میں بھی پایا جاتا ہے مگر انڈے کی زردی کو ان پر برتری حاصل ہے کیونکہ یہ جسم میں زیادہ اچھی طرح جذب ہتا ہے۔

ایک تحقیق کے مابق انڈے پسند کرنے والے افراد کا جسم کیروٹین، لیوٹین اور زیاژنتین کو نو گنا زیادہ بہتر طریقے سے جذب کرتے ہیں۔چونکہ آج کل لوگ سبزیوں کو کھانا پسند نہیں کرتے یا ماہرین طب کی تجویز کردہ مقدار سے کم استعمال کرتے ہیں لہذا اگر وہ ایک انڈہ استعمال کریں تو یہ غذائی کمی پوری کی جاسکتی ہے۔نوٹ: یہ مضمون عام معلومات کے لیے ہے۔ قارئین اس حوالے سے اپنے معالج سے بھی ضرور مشورہ لیں۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎