Android AppiOS App

بہترین زندگی کے راز, اسپیشل نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ


ویلنٹائن ڈے کے موقع پر بھارت میں انتہا پسند ہندو تنظیم بجرنگ دل نے پارک میں وقت گزارنے والے جوڑوں کا زبردستی ایسا کام کروا دیا کہ آئندہ کوئی یہ دن اس طرح نہیں منائے گا

  جمعہ‬‮ 15 فروری‬‮ 2019  |  12:25

محبت کی علامت سمجھے جانے والے دن ویلنٹائن ڈے کے موقع پر بھارت میں ہندو انتہاء پسند تنظیم بجرنگ دل نے پارک میں وقت گزارنے والے لڑکے اور لڑکی کی زبردستی شادی کروا دی۔میڈیا رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں ہر سال 14 فروری کو محبت کا عالمی دن منایا جاتا ہے۔ دنیا بھر میں نہ صرف شادی شدہ جوڑے بلکہ غیر شادی شدہ جوڑے بھی اس دن کو پرجوش انداز میں مناتے ہیں۔ رواں سال ویلنٹائن ڈے کے موقع پر بھارت میں ہندؤ انتہاپسند تنظیم کی جانب سے

نوجوان لڑکے اور لڑکیوں کی زبردستی شادیاں کرائے

جانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔سوشل میڈیا پر وائرل ہونیوالی ویڈیوز میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ہندو انتہاپسند تنظیم بجرنگ دل کے مبینہ کارکنان نوجوانوں کو زبردستی شادی کرنے پر مجبور کر رہے ہیں اور ساتھ ہی ان کی ویڈیوز بنا کر شیئر کر رہے ہیں۔بھارتی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق ریاست تلنگانہ کے ضلع میدچل کے ایک پارک میں ہندؤ انتہاپسند تنظیم کے کارکنان کی جانب سے ایک دوسرے کیساتھ وقت گزارنے والے لڑکے اور لڑکی کو زبردستی شادی کروا دی گئی ۔ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ پارک میں موجود لڑکے اور لڑکی کو شادی کیلئے زبردستی مجبور کیا گیا ہے ،ویڈیو میں شادی کرنیوالے لڑکے اور لڑکی کے چہرے پر خوف کو محسوس کیا جا سکتا ہے۔ویڈیو میں انتہاپسند تنظیم کے کارکنان کی مقامی زبان میں کی جانیوالی گفتگو بھی سنائی دے رہی ہے۔

بھارتی اخبار نے اپنی ایک رپورٹ میں بتایا ہے کہ ویلنٹائن ڈے کے موقع پر انتہاء پسند تنظیم کی جانب سے ریاست اتراکھنڈ کے شہر دہرہ دون میں 250 کارکنان کو جوڑوں کی ویڈیوز بنانے کیلئے مختلف مقامات پر تعینات کیا گیاتھا ۔انتہاء پسند تنظیم کے رہنماء کے مطابق ویلنٹائن ڈے کے موقع پر کئی جوڑے منگنی اور شادی کررہے تھے اور ایسا کرنے پر لوگ انہیں ہراساں کررہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ کارکنان کو جوڑوں کی حفاظت اور انہیں لوگوں کی جانب سے ہراساں کئے جانے کے ثبوت ریکارڈ کرنے کیلئے تعینات کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جوڑوں کی ویڈیوز ریکارڈ کرکے پولیس کو فراہم کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم ویلنٹائن ڈے کے موقع پر منگنی یا شادی کرنیوالے جوڑوں کی ویڈیوز میں ان کے چہرے نہیں دکھا رہے۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎