Android AppiOS App

بہترین زندگی کے راز, اسپیشل نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ


امریکی جج کا فیصلہ اور حضرت عمر رضی اﷲ تعالیٰ عنہ کا کارنامہ

  جمعرات‬‮ 16 مئی‬‮‬‮ 2019  |  18:05

ﮐﮩﺘﮯ ﮨﯿﮟ ﮐﮧ ﺍﯾﮏ ﺍﻣﺮﯾﮑﯽ ﺭﯾﺎﺳﺖ ﻣﯿﮟ ﺍﯾﮏ ﺑﻮﮌﮬﮯ ﮐﻮ ﺭﻭﭨﯽ ﭼﻮﺭﯼ ﮐﺮﻧﮯ ﮐﮯ ﺍﻟﺰﺍﻡ ﻣﯿﮟ ﮔﺮﻓﺘﺎﺭ ﮐﺮﻧﮯ ﮐﮯ ﺑﻌﺪ ﻋﺪﺍﻟﺖ ﻣﯿﮟ ﭘﯿﺶ ﮐﯿﺎ ﮔﯿﺎ ﺍﺱ ﻧﮯ ﺑﺠﺎﺋﮯ ﺍﻧﮑﺎﺭ ﮐﮯ ﺍﻋﺘﺮﺍﻑ ﮐﯿﺎ ﮐﮧ ﺍْﺱ ﻧﮯ ﭼﻮﺭﯼ ﮐﯽ ﮨﮯ ﺍﻭﺭ ﺟﻮﺍﺯ ﯾﮧ ﺩﯾﺎ ﮐﮧ ﻭﮦ ﺑﮭﻮﮐﺎ ﺗﮭﺎ ﺍﻭﺭ ﻗﺮﯾﺐ ﺗﮭﺎ ﮐﮧ ﻭﮦ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﺎ ﺟﺞ ﮐﮩﻨﮯ ﻟﮕﺎ '' ﺗﻢ ﺍﻋﺘﺮﺍﻑ ﮐﺮ ﺭﮨﮯ ﮨﻮ ﮐﮧ ﺗﻢ ﭼﻮﺭ ﮨﻮ ،ﻣﯿﮟ ﺗﻤﮩﯿﮟ ﺩﺱ ﮈﺍﻟﺮ ﺟﺮﻣﺎﻧﮯ ﮐﯽ ﺳﺰﺍ ﺳْﻨﺎﺗﺎ ﮨﻮﮞ ﺍﻭﺭ ﻣﯿﮟ ﺟﺎﻧﺘﺎ ﮨﻮﮞ ﮐﮧ

 ﺗﻤﮩﺎﺭﮮ ﭘﺎﺱ ﯾﮧ ﺭﻗﻢ ﻧﮩﯿﮟ ﺍﺳﯽ ﻟﯿﮯ ﺗﻮ ﺗﻢ ﻧﮯ ﺭﻭﭨﯽ ﭼﻮﺭﯼ ﮐﯽ ﮨﮯ، ﻟﮩٰﺬﺍ ﻣﯿﮟ ﺗﻤﮩﺎﺭﯼ

ﻃﺮﻑ ﺳﮯ ﯾﮧ ﺟﺮﻣﺎﻧﮧ ﺍﭘﻨﯽ ﺟﯿﺐ ﺳﮯ ﺍﺩﺍ ﮐﺮﺗﺎ ﮨﻮﮞ '' ﻣﺠﻤﻊ ﭘﺮ ﺳﻨﺎﭨﺎ ﭼﮭﺎ ﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ، ﺍﻭﺭ ﻟﻮﮒ ﺩﯾﮑﮭﺘﮯ ﮨﯿﮟ ﮐﮧ ﺟﺞ ﺍﭘﻨﯽ ﺟﯿﺐ ﺳﮯ ﺩﺱ ﮈﺍﻟﺮ ﻧﮑﺎﻟﺘﺎ ﮨﮯ ﺍﻭﺭ ﺍﺱ ﺑﻮﮌﮬﮯ ﺷﺨﺺ ﮐﯽ ﻃﺮﻑ ﺳﮯ ﯾﮧ ﺭﻗﻢ ﻗﻮﻣﯽ ﺧﺰﺍﻧﮯ ﻣﯿﮟ ﺟﻤﻊ ﮐﺮﻧﮯ ﮐﺎ ﺣﮑﻢ ﺩﯾﺘﺎ - ﭘﮭﺮ ﺟﺞ ﮐﮭﮍﺍ ﮨﻮﺗﺎ ﮨﮯ ﺍﻭﺭ ﺣﺎﺿﺮﯾﻦ ﮐﻮ ﻣﺨﺎﻃﺐ ﮐﺮ ﮐﮯﮐﮩﺘﺎ ﮨﮯ '' ﻣﯿﮟ ﺗﻤﺎﻡ ﺣﺎﺿﺮﯾﻦ ﮐﻮ ﺩﺱ ﺩﺱ ﮈﺍﻟﺮ ﺟﺮﻣﺎﻧﮯ ﮐﯽ ﺳﺰﺍ ﺳْﻨﺎﺗﺎ ﮨﻮﮞ ﺍﺱ ﻟﯿﮯ ﮐﮧ ﺗﻢ ﺍﯾﺴﮯ ﻣﻠﮏ ﻣﯿﮟ ﺭﮨﺘﮯ ﮨﻮ ﺟﮩﺎﮞ ﺍﯾﮏ ﻏﺮﯾﺐ ﮐﻮ ﭘﯿﭧ ﺑﮭﺮﻧﮯ ﮐﮯ ﻟﯿﮯ ﺭﻭﭨﯽ ﭼﻮﺭﯼ ﮐﺮﻧﺎ ﭘﮍﯼ ''

 ﺍْﺱ ﻣﺠﻠﺲ ﻣﯿﮟ 480 ﮈﺍﻟﺮ ﺍﮐﮭﭩﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﺍﻭﺭ ﺟﺞ ﻧﮯ ﻭﮦ ﺭﻗﻢ ﺑﻮﮌﮬﮯ '' ﻣﺠﺮﻡ '' ﮐﻮ ﺩﮮ ﺩﯼ۔ ﯾﮧ ﻗﺼﮧ ﺣﻘﯿﻘﺖ ﭘﺮ ﻣﺒﻨﯽ ﮨﮯ۔ﺗﺮﻗﯽ ﯾﺎﻓﺘﮧ ﻣﻤﺎﻟﮏ ﻣﯿﮟ ﻏﺮﯾﺐ ﻟﻮﮔﻮﮞ ﮐﯽ ﻣﻤﻠﮑﺖ ﮐﯽ ﻃﺮﻑ ﺳﮯ ﮐﻔﺎﻟﺖ ﺍﺳﯽ ﻭﺍﻗﻌﮯ ﮐﯽ ﻣﺮﮨﻮﻥ ﻣﻨﺖ ﮨﮯ ‏( حضرت ﺳﯿﺪﻧﺎ ﻋﻤﺮ ﺭﺿﯽ ﺍﷲ ﻋﻨﮧ ﭼﻮﺩﮦ ﺳﻮ ﺳﺎﻝ ﭘﮩﻠﮯ ﮨﯽ ﯾﮧ ﮐﺎﻡ ﮐﺮ ﮔﺌﮯ ﮐﮧ ﭘﯿﺪﺍ ﮨﻮﺗﮯ ﮨﯽ ﺑﭽﮯ ﮐﺎ ﻭﻇﯿﻔﮧ ﺟﺎﺭﯼ ﮐﺮﻧﮯ ﮐا ﺣﮑﻢ ﺩﮮ ﺩﯾﺎ ‏)ﮨﻤﺎﺭﮮ ١٠ ‏( ﺩﺱ ‏) ﺭﻭﭘﮯ ﮨﻤﺎﺭﮮ ﻟﺌﮯ ﺍﺗﻨﯽ ﺍﮬﻤﯿﺖ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮐﮭﺘﮯ ﺟﺘﻨﮯ ﮐﮧ ﺍﺱ ﻻﭼﺎﺭ ﮐﮯ ﻟﺌﮯ ﺭﮐﮭﺘﮯ ﮨﯿﮟ ﺟﻮ ﺟﺎﻧﮯ ﮐﺐ ﺳﮯ ﺑﮭﻮﮐﺎ ﮨﮯ۔۔۔ﺗﺒﺪﯾﻠﯽ ﮐﮯ ﻟﯿﺌﮯ ﮨﻤﯿﮟ ﺧﻮﺩ ﮐﻮ ﺑﺪﻟﻨﺎ ﮨﮯ۔۔ﺁﺋﯿﮯ ﻣﻞ ﮐﺮ ﮨﻢ ﺳﺐ ﺑﮭﯽ ﺍﭘﻨﯽ ﺳﻮﭺ ﺑﺪﻟﯿﮟ۔۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎