بہترین زندگی کے راز, اسپیشل نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ


میں ہمیشہ حیران ہوتا کہ پاکستان اتنا چھوٹا سا ملک ہے مگر پھر بھی بڑی بڑی سپر پاورز کو تڑیاں لگاتا ہے

  جمعہ‬‮ 28 جون‬‮ 2019  |  15:44

بھارتی فوج کے ایک سابق جرنیل نے کہا ہے کہ پاکستا ن نے پینٹاگون میں اور امریکی اسٹیبلشمنٹ میں اپنے کچھ کاروندوں کو پلانٹ کر رکھا ہے۔ بھارت کے ایک نجی ٹی وی چینل پر اینکر نے بھارتی فوج کے سابق جرنیل سے سوال کیا کہ اتنا تو طے ہے کہ پاکستان گیڈر بھھکیوں سے ڈرنے والا ملک نہیں ہے ۔

اور امریکی امداد کے بارے میں اس نے یہی کہا ہے کہ اس پیسے کو امریکہ کی جنگ کےلئے ہی استعمال کیا گیاہے۔ تو آپ ٹرمپ کو کیسے دیکھ رہے ہیں۔اس پر بھارتی فوج کے سابق

جنرل کا کہنا تھا کہ میں اکثر حیران ہوتا ہوں کہ ایک اتنا چھوٹا سا ملک اتنازور آور اور جرات مند کیسے بن گیا ہے۔ تو میرے خیال سے پاکستان نے آئی ایس آئی کے کچھ لوگوں کو پینٹا گون اور امریکی اسٹیبلشمنٹ میں پلانٹ کررکھا ہے ۔ اس لئے امریکہ کے کئی صدر مل کر بھی پاکستان کو دبائو کے زیر اثر لانے میں کامیاب نہیں ہوئے۔ لیکن ٹرمپ ایک مضبوط آدمی ہیں۔ وہ جو کہتے ہیں کرتے ہیں۔ اس لئے امید ہے کہ وہ پاکستان کو لگام ڈالنے میں کامیاب ہوجائیں گے۔لوگ سمجھتے ہیں سیکرٹ ایجنٹس بڑے ٹھاٹ سے رہنے والے لوگ ہوتے ہیں۔ تھوڑی سی دیر کےلیے تصور کریں محض فرض کی ادائیگی کے جرم میں کسی کے سارے ناخن پلاس سے کھینچ لیے جاتے ہیں۔ کسی کے دانت اکھاڑے جاتے ہیں۔ کسی کو بجلی کے جھٹکے دیے جاتے ہیں۔

کسی کی شلوار کے پائنچے باندھ کر چوہے چھوڑے جاتے ہیں، کسی کو برف کی سلوں پر گھنٹوں لٹایا جاتا ہے تو کسے کے پیروں کے تلوے ھیٹر سے داغ دیے جاتے ہیں۔ کیسامحسوس ہوا سوچ کر؟ اس زمین کے سینکڑوں بیٹے اس اذیت سے گزر کر شہید ہو چکے ہیں۔ کس لیے؟ محض ہمارے لیے۔ آپ کو پتہ ہے بیرونِ ملک لانچنگ سے قبل اس ملک کے ایجنٹس کو سائنائیڈ زہر کا ایک کیپسول بھی دیا جاتا ہے اور زہر دینے والا کوئی اور نہیں ہوتا وہ سینیئر افسر ہوتا ہے جو اس ایجنٹ کو اپنے بچوں سے بڑھ کر چاہتا ہے اور تربیت کرتا ہے۔ پرآخری وقت یہ تاکید کرتا ہے کہ بیٹے اگر پکڑے گئے تو دشمنوں کے ہاتھ آنے سے پہلے یہ زہر استعمال کر لینا ہماری زندگی ہمارے ملک سے اہم نہیں ہے۔ تصور کریں کوئی اپنے بیٹے کو اپنے ہاتھوں سے زہر کھانے کا کہہ سکتا ہے ؟ مگر یہ لوگ کہتے ہیں۔ کس لیے؟ محض ہمارے لیے۔ دورانِ ڈیوٹی شہادت پانے والوں کو بڑے اعزاز سے دفنایا جاتا ہے مگر

یہ واحد لوگ ہیں جو گمنامی کی زندگی جی کر گمنامی میں انتقال کر جاتے ہیں۔ ان لوگوں کا جذبہ کیا ہوگا جن کی لاشیں لینے بھی کوئی نہیں جا سکتا اور بنا شور شرابہ کیے ان کو دفن کیا جاتا ہے۔ کیا یہ آسان ہوتا ہے کہ اپنے کولیگ کی لاش وصول کرنے بھی کوئی خود نہ جا سکے؟ ان کے بچے بھی ہوتے ہیں اور گھر والیاں بھی ماں باپ بھی۔ ایسا آج تک نہیں ہوا کہ مشن پہ جانے سے قبل کسی ایجنٹ نے اپنے مشن سے متعلق بتایا ہو۔ شہادت کی صورت میں بعض دفعہ گھر والوں کو کئی کئی سال علم نہیں ہوتا کہ ہمارا بھائی بیٹا یا باپ شہید ہو چکا ہے۔ یہ لوگ کس لیے کرتے ہین یہ سب؟ ہمارے لیے محض ہمارے لیے۔ یہی وجہ ہے کہ ہم بنا ان کو دیکھے، بنا ان کو ملے ساری زندگی محض سیکرٹ ایجنٹس کے خیال سے محبت کرتے ہیں۔ وہ بھی تو بنا ہمیں دیکھے بنا ہمیں ملے ہمارے لیے جان دیتے ہیں تو ہم بھی بنا انہیں ملے اور بنا انہیں دیکھے کیوں نہ ان پہ جان دینے کی سوچ اپنائیں۔ اور ہاں۔ کسی سیکرٹ ایجنٹ کی زندگی اس سے کہیں زیادہ تلخ اور سخت ہوتی ہے جتنا آپ آسانی کا گمان کرتے ہیں۔


loading...

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎