cold-village-768x384

دنیاکاایساسردترین گائوں جس کادرجہ حرارت اتنازیادہ گرجاتاہے کہ جان کرآپ حیران رہ جائینگے

  بدھ‬‮ 11 اکتوبر‬‮ 2017  |  13:53

پاکستان سمیت دنیابھرمیں اگردرجہ حرارت 10 سینٹی گریڈسے نیچے گرجائے توشہریوں کےلئے زندگی بسرکرنامشکل ہوجاتی ہے تفصیلات کے مطابق روس میں ایک ایساگائوں بھی ہے جہاں درجہ حرارت منفی2 سے 71سینٹی ڈگری گریڈتک گرجاتاہے جس کی وجہ سے اس کودنیاکاسردترین گائوں قراردیاگیاہے اس گائوں کانام اومیان ہے اورموسم سرمامیں اس گائوں میں موبائل سروس بھی کام کرناچھوڑجاتی ہے ۔مرنے والے تومرجاتے ہیں لیکن ان کےلئے لواحقین کےلئے ایک نئی پریشانی کھڑی ہوجاتی ہے کہ اس گائوں کی  زمین اتنی ٹھنڈی ہے کہ یہاں پرزمین کوکوئلے سے گرم کرکے قبرکھودی جاتی ہے ۔غیرملکی میڈیارپورٹس کے مطابق اس گائوں کادرجہ حرارت صرف منفی 2 سینٹی گریڈہی رنہیں رہتاہےبلکہ بعض اوقات منفی 50 تک پہنچ جاتاہے اسی لئے اس گائوں کوپول آف کولڈکانام دیاگیاہے ۔اس گائوں کی آبادی 500افراد پرمشتمل ہے اس گائوں کے باسی اپنی گاڑیوں کودوبارہ سٹارٹ کرنے کے بجائے تمام دن دوڑاتے رہتے ہیں کیونکہ ٹھنڈک کی وجہ سےگاڑیوں کی بیٹریاں کام نہیں کرتی ہیں جس کےلئے گاڑیوں

ہیں جس کےلئے گاڑیوں کوسٹارٹ کرنےکےلئے گرم کوئلہ استعمال کیاجاتاہے ۔اس علاقے میں قطبی ہرن زیادہ ہوتے ہیں جس کی وجہ سے 1920 میں یہاں لوگوں نے آبادہوناشروع کر دیااورپھراس علاقے کوہی کواپنا مستقل مسکن بنالیا۔اس گائوں اومیان کے نام کامطلب نہ جمنے والاپانی ہے ۔اس دورجدید میں بھی یہاں کے شہری گھروں میں لکڑی اورکوئلہ ایندھن کے طورپراستعمال کرتے ہیں اوران کی غذاقطبی ہرن اوربرفیلی مچھل کاگوشت ہے۔طبی ماہرین کاکہناہے کہ اس گائو ں کے شہری اس لئے سردی سے زیادہ بیمارنہیں ہوتے ہیں کہ گوشت استعمال کرنے سے ان کی کلوریزکم نہیں ہوتی ہیں اوروہ توانارہتے ہیں ۔اس گائوں میں سکول میں چھٹیاں نہیں ہوتی ہیںصرف چھٹی اس وقت ہوتی ہے جب درجہ حرارت منفی50 ڈگری سینٹی گریڈہوجائے ۔سیاح بھی زیادہ سردی کی وجہ سے اس گائوں کارخ نہیں کرتے ہیں ۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎