Untitled-3 copy

اسلام ” ویلنٹائن ڈے ” کے بارے میں کیا کہتا ہے ؟

  جمعرات‬‮ 12 اکتوبر‬‮ 2017  |  19:51

والن ٹائن ایک عیسائی راہب تھا جس کو عشق و محبت کرنے والوں کا ہیرو بھی کہا جاتا ہے ، اس کی یاد میں  والنٹائن ڈے  منایا جاتاہے ، جو کہ عیسائیوں کا ایک تہوار اور رسم ہے ،جس میں عشق کرنے والے لڑکے اور لڑکیاں ایک دوسرے کو تحفے تحائف دیتے ہیں ، اور یہ رسم 14 فروری کو منائی جاتی ہے. چونکہ یہ خالص غیر مسلم اقوام کا طریقہ اور انہی کی رسم ہے لہذا مسلمانوں کو چاہئے کہ مذکور طریقےرسم  سے اجتناب کریں ، ورنہ اس کی نحوست سے ایمان خطرے میں پڑنے کا اندیشہ ہے ، اسلام کے اندر صرف دو تہوار ہیں: عید الاضحیٰ اور عید الفطر ، ان کے علاوہ کسی اور خاص دن کے منانے سے منع کیا گیا ہے ، جیسے کہ اسلام سے پہلے دو دن “نیروز” (نوروز) اور “مہرجان” تہوار

اور “مہرجان” تہوار کے طور پر منائے جاتے تھے ، حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے ان سے منع فرمایا ، اور جو کھیل تماشہ ان میں ہوتا تھا اس سے منع فرمادیا، اور ارشاد فرمایا کہ ” اللہ تعالیٰ نے تمہارے لئے ان دو دنوں کے بدلے ان سے بہتر دو دن عطا فرمائے ہیں ، یعنی یوم الاضحیٰ اور یوم الفطر ، پس مسلمانوں کو اس قسم کے تہواروں میں شرکت سے احتراز لازم ہے ۔

کتبہ : محمد طیب شاہ عفی عنہ

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎