بہترین زندگی کے راز, نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ


خوشی کے لمحات دل کے دورے کا باعث بن سکتے ہیں، تحقیق

  بدھ‬‮ 5 دسمبر‬‮ 2018  |  12:44

انسانی زندگی جذبات کا مجموعہ ہے جس میں  خوشی ،غم، ناراضگی اورخوف  کو خاص مقام حاصل ہے لیکن یہ جذبات حد سے بڑھ جائیں تو انسان کے لیے جان لیوا بھی ہوسکتے ہیں اسی لیے ایک نئی تحقیق میں انکشاف کیا گیا ہے کہ ان جذبات کے حد سے زیادہ غالب آجانے سے سینے کی تکلیف اور سانس لینے مشکل اور دل کی تکلیف کا باعث بنتے ہیں۔

سوئس سائنس دانوں کی تحقیق میں کہا گیا ہے کہ دل کے بائیں وینٹریکل کی شکل میں تبدیلی کی بیماری ’’ٹیکوٹ سبو کارڈیومی تھراپی‘‘ کے ایک تہائی سے زیادہ

مریضوں کی بیماری میں اضافے کی وجہ ذہنی دباؤ سمیت کئی جذبات ہوتے ہیں۔ یورپین ہارٹ جنرل میں یونیورسٹی زیورچ کی شائع ہونے والی تحقیق میں کہا گیا ہے 20 کیسز میں سے ایک مریض ایسا ہوتا ہے جو اس دل کی بیماری کا شکار خوشی کے جذبے کی وجہ سے ہوتا ہے۔

ماہرین نے تحقیق کے دوران 1750 مریضوں کا مطالعہ کیا جس کے نتائج کے مطابق دل کی بیماریوں کا باعث بننے میں اہم کردار کرنے والے عناصر میں سالگرہ پارٹی، بیٹے کی شادی، کسی دوست سے کئی سال بعد ملنے کی خوشی، دادی بننے کی خوشی، فیورٹ ٹیم کا جیت جانا اور لاٹری کا اچانک نکل آنا شامل ہیں۔ تحقیق میں شامل ماہرین کا کہنا ہے کہ دل کی بیماری ’’ٹیکوٹ سبو کارڈیومی تھراپی‘‘ کے اسباب کافی مختلف ہوتے ہیں تاہم اس بیماری کا شکار زیادہ تر وہی لوگ ہوتے ہیں جو جذبات کی زیادتی کا شکار ہوجائیں جن میں خاص طور پر مثبت جذبات شامل ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ جب کوئی مریض سینے میں درد، سانس میں مشکل کی وجہ سے ہارٹ اٹیک کا شکار ہو تو ڈاکٹر فوری طو پر سمجھ لیتے ہیں کہ یہ مریض ’’ٹیکوٹ سبو کارڈیومی تھراپی‘‘ کا شکار ہوا ہے۔ برٹش ہارٹ فاؤنڈیشن  کے پروفیسر کا کہنا ہے کہ یہ بیماری اگرچہ کم ہوتی ہے لیکن اکثر اس کی وجہ خوشی کے جذبات ہی سامنے آتی ہے۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎