بہترین زندگی کے راز, نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ

فحاشی و عریانی کی وبا

  پیر‬‮ 16 اپریل‬‮ 2018  |  14:08

یہودیوں کو دنیا میں سب سے بڑا خطره مسلمانوں سے تھا کیونکہ انہوں نے مسلمانوں کی بہادری کے جواہرات میدان جنگ میں دیکھ لیۓ تھے انہیں یقین ہو گیا تھا کہ میدان جنگ میں مسلمان کو شکست نہیں دی جا سکتی۔ اس لیۓ انہوں نے ایک دیمک کی مثل مسلمانوں کو اندر سے کھوکھلا کرنا شروع کر دیا وه مسلماں میں فحاشی عریانی کی وبا کبھی اپنی عورتوں کے ذریعے پیلاتے تو کبھی فحش ناولز نگاری کے ذریغے پھیلانے میں لگے رہے اور آج وه میڈیا اور انٹرنیٹ کے ذریعے ہر مسلم گھرانے میں فحاشی و عریانی کی وبا پھیلانے

وبا پھیلانے میں کامیاب ہو گے۔

آج ھمارا اپنا میڈیا ماڈلنگ آرٹسٹ اور فیشن شوز کے نام پرھم میں فحاشی و عریانی کی وبا پھیلانے میں اہم کردار ادا کر رہا ہے کبھی ڈراموں میں پرده داری پر تنقید کی جا رہی ہے تو کبھی پرده کرنے والیوں کو اولڈ مائنیڈڈ کے خطابات سے نواز ان کو احساس کمتری کا شکار کیا جاتا ہے۔ ھم آج دین سے دور ہیں تو اسی فحاشی کی وجہ سے آج ھمارے قلوب ذکر الہی سے خالی ہیں تو اسی فحاشی کی وجہ سے۔ ملک و قوم کی اصلاح میں رکاوٹ کی سب سے بڑی وجہ یہی فحاشی ہے۔ سلطان صلاح الدین ایوبی کا قول ہے کہ ''اگر کسی قوم کو تباه کرنا ہو تو اس میں فحاشی پھیلا دو ''یہ بات سلطان صلاح الدین ایوبی نے بلکل سچ کہی تھی کیونکہ فحاشی اقوام عالم کے کردارکو تباه کر دیتی ہے۔ ماں بہن بیٹیوں کی عزتوں کے رکھوالے ان کی عزتوں کے خریدار بن جاتے ہیں لوگوں میں عداوتیں بڑھتی ہیں بڑی بڑی دشمنیاں جنم لیتی ہیں خون بہتے ہیں فسادات اٹھتے ہیں اس فعل بد کے نتائج سے جو نسل پروان چڑھتی ہے وه بدزبان بے حیا بے غیرت دین دشمن اور انسانیت دشمن ہوتی ہے۔

ہماری ذلت و پستی کی وجہ یہی کہ ہمارا ضمیر مر چکا ہے ھمارے دل مرده ھو چکے ہیں ھم اپنے رشتوں کی پہچان کھو چکے ہیں ھم ہوس کی آگ میں اندھے ہو چکے ہیں

''حضور علیہ الصلوة والسلام کا فرمان ہے کہ زنا دین کو تباه کر دیتا ہے۔''

الله پاک سورة الاسراء کی آیت نمبر 32 میں ارشاد فرماتے ہیں کہ ''اور بدکاری کے قریب بھی نہ جاؤ کہ یہ بے حیائی )فحاشی( اور نہایت ہی بری راه ہے''

فحاشی و عریانی ایسی بری راه ہے جس کا مسافر ساری عمر بھٹکتا رہتا ہے اس کی کوئی منزل نہیں ہوتی، وه فحاشی کے دلدل میں پھنستا چلا جاتا ہے جس میں وه باوجود ہاتھ پاؤں مارنے کے باھر نہیں نکل پاتا کیونکہ یہ راه ہی ایسی پرفریب اور لذت آمیز ہے۔ بلآخر وه الله کی گرفت میں آ جاتا ہے کیونکہ الله تعالی کو اگر کسی برائی پر بہت زیاده غیرت آتی ہے تو وه یہی فعل بد ہے۔

الله تعالی نے زنا )فحاشی( کو شرک اور قتل کے بعد سب سے بڑا گناه قرار دیاجو یہ کام کرے گا اس کیلۓ قیامت کے دن دوگناه عذاب ہو گا۔

کیا معمولی سے گرمی برداشت نہ کرنے والے پاکستانی دوگناه عذاب کی شدت برداشت کر لیں گے.....؟

خدارا بچو اس فحاشی سے خود بھی بچو اور دوسروں کی بھی بچاؤ اگر خود اس فحاشی کی دلدل میں دھنس چکے ہو تو دوسروں کو دھنسا کر خدا کر قہر کو مت للکارو۔ مغرب کا حالات ھمارے سامنے ہیں مغرب نے یہ راستہ اختیار کیا تو ان کا خاندانی نظام نسلیں اور نسب برباد ہو گے ان کو اپنے باپ دادا کی بھی پہچان نہیں کہ وه اصل میں کس کی اولاد ہے ان پر خدا کا عذاب ایڈز اور دوسری بیماریوں کی صورت میں مسلط ہو چکا ہے اور پاکستان میں ایڈز کا یہ مرض جو کہ اصل میں عذاب الہی ہے پھیل رہا ہے۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎