بہترین زندگی کے راز, نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ

سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ترجمان کی طوفانی بارش کے نتیجے میں اسلام آباد ایئرپورٹ میں پانی جمع ہونے کے حوالے سے سوشل میڈیا پر چلنے والی ویڈیو کلپس ،ایئرپورٹ حکام کا حیرت انگیز موقف سامنے آگیا

  منگل‬‮ 12 جون‬‮ 2018  |  10:18

پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ترجمان نے طوفانی بارش کے نتیجے میں اسلام آباد ائیرپورٹ میں پانی جمع ہونے کے حوالے سے سوشل میڈیا پر چلنے والی ویڈیو کلپس کی تردیدکرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ ویڈیو کلیپس ٹرمینل سے 700میٹر کے فاصلے پر عمارت کے ہیں جو ابھی آپریشنل نہیں ہوئی ،چیف جسٹس سپریم کورٹ نے بھی ائیر پورٹ مینجراسلام آبادکے موقف کو بہت سراہا اور ہدایات دیں کہ مسافروں کے آرام اور سہولیات کو جاری رکھیں۔پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی نے اسلام آباد ایئرپورٹ کے حوالے سے سوشل میڈیا پر چلنے والی منفی ویڈیو کلپس کے حوالے

بیان جاری کیا ہے کہ پیسنجر ٹرمینل بلڈنگ میں بارش کا پانی داخل نہیں ہوا اور تمام آپریشنز معمول کے مطابق جاری رہے۔ چیف جسٹس آف پاکستان نے سوشل میڈیا اور کچھ ٹی وی چینلز پر چلنے والی ویڈیو کلپس کا سو موٹو (suo moto)نوٹس لیا اور ائیرپورٹ مینجر کواس حوالے سے وضاحت کے لئے طلب کیا۔سوشل میڈیا پر نشر ہونے والی ایک ویڈیو اندرون اور بیرون ملک آمد اور روانگی لاؤنجز سے پہلے ائیر کنڈیشننگ کی سہولیات کے بغیر میٹر گریٹر ایریا کی ہے۔ائیرپورٹ انتظامیہ نے اس کا فوری طور پر نوٹس لیتے ہوئے 30منٹ کے اندر صفائی کے عملے کی مدد سے ایریا صاف کردیا۔عمارت کو کوئی نقصان نہیں پہنچا اور مسافروں کی آمدورفت معمول کے مطابق رہی۔سوشل میڈیا پر نشر ہونے والی ایک اور ویڈیوجو ائیر لائن کے ملازم نے وائرل کی وہ زیر تعمیر عمارت کی ہے جو ٹرمینل بلڈننگ سے 700میٹر کے فاصلے پر ہے۔اور اس عمارت کی کوئی آپریشنل حیثیت نہیں ہے۔سول ایوی ایشن اتھارٹی کی سرپرستی میں ٹھیکیدارنے فوری طور پر جمع شدہ پانی نکالنے کا عمل شروع کر دیا۔سول ایوی ایشن اتھارٹی کی انتظامیہ نے ٹھکیدار کو ہدایات دی ہیں کہ آئندہ آنے والے مون سون سے پہلے احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد کرے۔کچھ غیر ذمہ دارانہ میڈیا عناصر نے رن وے پر جمع شدہ پانی کی کچھ تصاویرتشہیر کیں جن کا اس ائیرپورٹ سے کوئی تعلق نہیں۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎