Android AppiOS App

بہترین زندگی کے راز, اسپیشل نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ


وزیراعظم عمران خان کو راستے سے ہٹانے کیلئے بڑی طاقتیں سرگرم پاک افغان بارڈرز پر پاکستانی خفیہ اداروں نے دہشتگردوں کی کالز پکڑ لیں ان کالز میں کیا باتیں ہو رہی تھیں ؟قومی اخبار کی رپورٹ میںخوفناک انکشافات

  ہفتہ‬‮ 8 ستمبر‬‮ 2018  |  18:24

اسلام آباد  پاکستانی خفیہ اداروں نے افغانستان میں موجود پاکستان مخالف دہشتگرد گروپس کی کالز پکڑ لیں، پاکستان دشمن مغربی ممالک کا عمران خان کو راستے سے ہٹانے کیلئے پلان بے نقاب ہو گیا، قومی اخبار کی رپورٹس میں سنسنی خیز انکشافات سامنے آگئے۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان کے ایک مؤقر قومی اخبار ’روزنامہ 92نیوز‘کی

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہےکہ پاکستان کے خفیہ اداروں نے پاک افغان سرحد پر افغانستان میں موجود پاکستان مخالف دہشتگرد گروپس کی چند کالز انٹرسیپٹ کی ہیں جبکہ ہیومن انٹیلی جنس ذرائع سے بھی معلومات ملی ہیں جن سے پتہ چلتا

ہے کہ کچھ بین الاقوامی طاقتیں خطے میں اپنا کھیل جاری رکھنے کیلئے پاکستانی وزیراعظم عمران خان کے خلاف سازشوں میں مصروف ہیں جس کی وجہ سے ان کی جان کو خطرات درپیش ہو سکتے ہیں ۔ پاکستانی خفیہ اداروں نے وزیراعظم کو 22دن کے اندر تین مخصوصی تھریٹ ایڈوائزری جاری ہیں اور ان کو ٹاپ سکیورٹی اقدامات لینے کا مشورہ دیا گیا ہے

تاہم وزیراعظم اپنی کفایت شعاری اور پروٹوکول کی وجہ سے زیادہ اخراجات سے گریزاں ہیں۔ وزیراعظم کو دی گئی تھریٹ ایڈوائزری میں انہیں زمینی سفرکم سے کم کرنے کا مشورہ دیا گیا ہے اور یہی وجہ ہے کہ وزیراعظم نے چند جگہوں پر ہیلی کاپٹر کا بھی استعمال کیا ہے۔ ذرائع نے کہا افغانستان سے آپریٹ کرنے والے دہشتگرد گروپس کے کمیونیکشن انٹرسپٹس کو ڈی کوڈ کرنے اور ہیومن انٹیلی جنس ذرائع کی انفارمیشن کے بعد ایسی چیزیں سامنے آئی ہیں جن سے اندازہ ہوتا ہے کہ کچھ انٹرنیشنل پلیئرز نئے وزیر اعظم پاکستان کوخطے میں اپنے مفادات کے لئے خطرہ سمجھتے ہیں اور کوئی ایسی کارروائی کر سکتے ہیں جس سے وزیر اعظم کی جان کو نقصان پہنچ سکے ۔ان رپورٹس کی اسسمنٹ میں بتایا گیا ہےکہ

نئی حکومت کی خارجہ پالیسی کو بعض مغربی قوتیں، جن کے جنوبی ایشیاء میں بڑے مفادات ہیں، اپنے لئے خطرہ سمجھتے ہیں،وہ سمجھتے ہیں کہ پاکستان کے نئے وزیر اعظم خارجہ امور کے فرنٹ پر جارحانہ اقدامات اور خطے میں پاکستان سے چائنہ اور روس کا بڑھتا ہوا تعاون ،جس سے انکی بلیک میلنگ پالیٹکس کی گنجائش ختم ہو گئی ہے ایسی صورتحال میں انکو کسی انتہائی اقدام کی تیاری رکھنی چاہئے ۔ذرائع نے بتایا ملک کے ٹاپ انٹیلی جنس ادارے وزیر اعظم کی سکیورٹی کو درپیش خطرات کے حوالے سے بڑے کائونٹر انٹیلی جنس آپریشنز پر کام کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا یہ کہنا بالکل درست ہو گا کہ وزیراعظم کے حوالے سے تھریٹس حقیقی ہیں۔

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎