بہترین زندگی کے راز, اسپیشل نفسیاتی مسائل کا حل , اپنی صحت بہتربنائیں, اسلام اورہم, ترقی کےراز, عملی زندگی کےمسائل اورحل, تاریخ سےسیکھیئے, سماجی وخاندانی مسائل, ازدواجی زندگی بہتربنائیں , گھریلومسائل, روزمرہ زندگی کےمسائل, گھریلوٹوٹکے اسلامی واقعات, کریئر, کونساپیشہ منتخب کریں, نوجوانوں کے مسائل , بچوں کی اچھی تربیت, بچوں کے مسائل , معلومات میں اضافہ , ہمارا پاکستان, سیاسی سمجھ بوجھ, کالم , طنز و مزاح, دلچسپ سائینسی معلومات, کاروبار کیسے کریں ملازمت میں ترقی کریں, غذا سے علاج, زندگی کےمسائل کا حل قرآن سے, بہترین اردو ادب, سیاحت و تفریح, ستاروں کی چال , خواتین کے لیے , مرد حضرات کے لیے, بچوں کی کہانیاں, آپ بیتی , فلمی دنیا, کھیل ہی کھیل , ہمارا معاشرہ اور اس کی اصلاح, سماجی معلومات, حیرت انگیز , مزاحیہ


سوشل میڈیا پر نوکری کا جھانسہ د یکر بلائے گئے نوجوانوں کی آبروریزی، تہلکہ خیز انکشافات

  پیر‬‮ 21 ستمبر‬‮ 2020  |  15:26

شہر قائد میں سوشل میڈیا پر نوکری کا جھانسہ اور انٹرویو کے لیے آئے نوجوانوں کی آبروریز ی کا انکشاف ہوا ہے۔ایڈیشنل ڈائریکٹر ایف آئی اے سائبر کرائم کراچی فیض اللہ کریجو کے مطابق کارروائی کے دوران ویڈیو بنا کر بلیک میلنگ اور ویڈیوز ایپلی کیشن پر اپ لوڈ کرنے والا گروہ بے نقاب ہوا ہے،ایف آئی اے سائبر کرائم سرکل نے کراچی کے مختلف علاقوں میں کارروائیاں کرکے ویڈیو بنا کر بلیک میلنگ اور ایپلی کیشن پر اپ لوڈ کرنے والے گروپ کے 2 کارندوں کو گرفتار کرلیا ہے۔ گروپ کے کارندوں کو گلستان جوہر اور دیگر

style="text-align: right;">علاقوں سے گرفتار کیا گیا۔ کراچی کال سینٹر جابز کے نام گروپ میں شامل ہونے والے پندرہ سالہ نوجوان کی آبرروریزی کی گئی،گروپ کے گرفتار کارندوں نے کئی واقعات کا انکشاف کردیا۔فیض اللہ کوریجو کے مطابق گروہ کے کارندوں سے ملنے والے موبائل فون سے کئی ویڈیوز برآمد ہوئی ہیں، متاثرہ نوجوان نے ایف آئی اے سائبر کرائم سرکل سے چند روز پہلے رابطہ کیا تھا، نوجوان کو واٹس ایپ پر کراچی کال سینٹر جوبز کے گروپ کے ذریعے نوکری کی پیشکش ہوئی، نوجوان کو انٹرویو کے لیے ڈرگ روڈ پر فلیٹ پر بلایا گیا جہاں اس کی آبروریزی کی گئی اور اسے بلیک میل کرنے کے لئے ویڈیو بنائی گئی۔ گروہ کے کارندے نوجوان کو بلیک میل کرکے ویڈیو اس کے گھر والوں کو بھیج رہے تھے، یہ گروپ ویڈیوز دیگر انٹرنیشنل سوشل میڈیا ایپلی کیشنز پر بھی اپ لوڈ کر چکا ہے، ملزمان کے قبضے سے ملنے والے موبائل فون سے ویڈیوز بنا کر بلیک میلنگ کے شواہد اور کئی متاثرہ لوگوں کی درجنوں ویڈیوز ملی ہے۔یہ گروپ نوجوان بچوں کو نوکری کا جھانسہ، پیسے دے کر غیر اخلاقی ویڈیوز بنا کر انٹرنیشنل ایپ پر اپلوڈ کردیا کرتا ہے، بیشتر متاثرہ لڑکوں نے بدنامی سے بچنے کے لیے نہ ہی پولیس کو اور نہ ہی ایف آئی اے کو شکایت کی۔


انٹرنیٹ کی دنیا سے ‎‎

دن کی زیادہ پڑھی گئیں پوسٹس‎